The news is by your side.

وفاقی حکومت کو بھی بلوچستان میں بچوں کے غذائی قلت کے سنگین مسئلے سے آگاہ کیا

0

کوہلو یکم جنوری :۔ ضلع کوہلو میں پی پی ایچ آئی کے زیر اہتمام ماں اور بچہ کی مناسبت سے آگاہی سیمینار کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں پی پی ایچ آئی کے ضلعی آفیسر رفیق بزدارنے شُرکاءکو تفصیلی بریفنگ دی تقریب میں ممبر صوبائی اسمبلی میر نصیب اللہ مری،ڈپٹی کمشنر عبداللہ خان کھوسہ ،ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرڈاکٹر شیرزمان مری،ڈپٹی ڈی ایچ اوڈاکٹر محمد علی مری،ملیریا پروگرام کے آفیسر شاہ میر بلوچ،ڈپٹی ڈی او حفیظ اللہ،نیوٹریشن کے آفیسر محمد سمیع زرکون،میر نثار احمد مری ،میر باز محمد مری و دیگر نے شرکت کی ہے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ممبر صوبائی اسمبلی میر نصیب اللہ مری کا کہنا تھا کہ انہوں نے اپنے دور میں صحت کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کئے ہیں جس میں نیوٹریشن کےلئے خطیر رقم مختص کی گئی میںنے گزشتہ ماہ وفاقی حکومت کو بھی بلوچستان میں بچوں کے غذائی قلت کے سنگین مسئلے سے آگاہ کیا میں نے شعبہ صحت میں آتے ہی صوبے کے 7اضلاع میں جاری نیوٹریشن پروگرام کو پورے تک پھیلا دیا ہے اب ہر ضلع میں نیوٹریشن کام کررہی ہے ہمارے علاقوں میں بچے شدید غذائی قلت کے شکار ہیں اس مسئلے کے لئے صوبائی اسمبلی میں آواز اٹھاوں گا تاکہ اس پر مزید کام ہوسکے میں وزیراعظم عمران خان کا سپاہی ہوں اور اولین کوشش ہے کہ خان صاحب کے وژن کے مطابق دوردراز اور پسماندہ علاقوں کے لوگوں تک سہولیات فراہم کرسکیں قلیل مدت میں شعبہ صحت میں ایسے قدامات کئے ہیں جن کی مثال ماضی میں نہیں ملتی لوگوں کو میرٹ کے مطابق روزگار دے رہے ہیں ماضی کی حکومتوں میں نوکریوں کے لئے منڈی جیسے بولیاں لگتی تھی میں نے ضلع کے تعلیم یافتہ نوجوانوں کو 320نوکریاں میرٹ کے مطابق دے کر غریبوں کو روزگار فراہم کیا ہے آئندہ بھی میرٹ کے مطابق تعلیم یافتہ نوجوان آگے آئیں گے کوہلوکی ترقی میں مقامی صحافیوں کے کردار سے انکار نہیں کیا جاسکتا ہے یہاں کے پرانے اور سینئر صحافیوں نے عوامی مسائل کے آگاہی اور لوگوں میں شعور کو اجاگر کرنے کے لئے گراں قدر خدمات سرانجام دیئے ہیں ضلع میں پانی ،بجلی،سڑکوں کے ترقیاتی اسکیمامات کے ساتھ عوام کو بنیادی سہولیات کی فراہمی کے لئے ترقیاتی کام ٹینڈر کے مراحل سے گررہے ہیں جس کے بعد عوام کو ترقی کے ثمرات نظر آئینگے اس موقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر عبداللہ خان کھوسہ نے کہا ہے کہ ضلع میں نیوٹریشن کے لئے بڑی جدوجہد کی گئی ہے بچوں کو غذائی قلت سے بچاﺅ کے لئے ٹیموں نے ضلع کے دشوار گزار علاقوں میں پہنچ کر اپنے فرائض کو بخوبی سرانجام دیا ہے اس پروگرام ہمارے اضلاع میں مزید چلانے اور قدامات کی ضرورت ہے ۔

You might also like