کیوں ان زائرین کوان کےآبائی علاقوں میں براہ راست نہیں پہنچایاجارہاانھیں کوئٹہ میں لاکر بسانا غیرسنجیدہ عوام دشمن فیصلہ ہے

0

بلوچستان نیشنل پارٹی کےمرکزی نائب صدر ملک ولی کاکڑنےکہاہےکہ کرونا وائرس نےپوری

 

دنیاکولپیٹ میں لے لیاہے جس پرمختلف ممالک احتیاطی تدابیراختیارکرچکےہیں لیکن یہ امرانتہائی تکلیف دہ ہےکہ ایران جواس وائرس کاشکارہے وہاں سےزائرین کی آمدکےساتھ کرونا وائرس یہاں منتقل ہوسکتاہےاس کے سدباب کےلئےکئی ممالک نےاحتیاطی تدابیراورالگ ہسپتال تک آبادی سےدور بنادیاہےجوڈسپوزل یعنی مصنوعی ہسپتال بنادیاہےجواس وائرس پرقابو پانےکےبعدختم کیاجائیگالیکن بلوچستان جوﷲکےفضل سےاس وائرس سےمحفوظ ہےاب تفتان سے زائرین کولاکرکوئٹہ کےمضافات ہزار گنجی میاں غنڈی شیخ زیدہسپتال اور حاجی کیمپ میں بسایاجارہاہےشیخ زیدہسپتال سنٹرلی ائرکنڈیشنڈہےجس میں وائرس ہونےکی صورت پورےہسپتال کوآناً فاناًلپیٹ میں لےسکتاہےجس کےپیش نظراس کےاثرات خدانخواستہ پھیل گیاتوکیاکرسکتےہیں ناقص طبی کارکردگی والے حکمران عوام کوپولیو پرجوسالوں سےکام کرنےکےباوجود قابونہیں پاسکاہےتواس کامقابلہ کس طرح ممکن ہےعوام کو محفوظ رکھنا انتہائی مشکل ہےاورہمیں کیوں اس طرح کےانسانی المیوں سےدوچار کیاجارہاہے بلوچستان میں پولیوکینسرہارٹ اٹیک سمیت دیگر طبی سہولیات سمیت روڈحادثات میں واقعات پرقابونہیں رکھ سکاتواس پر کیاکرسکتاہےکینسرکاافتتاح شیخ زیدہسپتال کےتحت ہوالیکن کینسرہسپتال اپنی جگہ اب اس کروناہسپتال میں تبدیل کیاگیاجس علاقےکےعوام میں تشویش پائی جارہی ہےان کےخدشات حقیقت پرمبنی ہےکیونکہ شنیدمیں آیاہےکہ آئی ایم ایف کےاعلان کردہ دس ارب ڈالرکےبعدقوی امکان ہےکہ اب کرونا وائرس کوجس طرح بھی ہو جام حکومت بلوچستان پرمسلط کریگاجس کےلئےسی پیک کےفوائدکےنام استحصال کودیکھتےہوئے کروناکوبھی حکومت اپنی معاشی ضرورتوں کےلئے استعمال کریگاجوایک تشویشناک عمل ہےجس کابراہ راست اثرات بلوچستان پرپڑینگےجس کےلئے بالخصوص کوئٹہ کاانتخاب قابل مزمت ہےاب حالات اس طرح ہم پر مسلط ہوئےتو بلوچستان جوسیاسی معاشی صورتحال کےباعث اس طرح کےاثرات کوبرداشت نہیں کرسکتایہ امر قابل تشویش ہےکہ کیوں ان زائرین کوان کےآبائی علاقوں میں براہ راست نہیں پہنچایاجارہاانھیں کوئٹہ میں لاکر بسانا غیرسنجیدہ عوام دشمن فیصلہ ہے جس سےبلوچستان سمیت کوئٹہ کے شہریوں میں تشویش لائق ہوچکی ہے جن کویہاں بساناسازش ہےجس کا بھرپورمزاحمت کیاجائیگاکیونکہ اگر بلوچستان میں حکومتی نااہلی کےباعث کوئی ناخوشگوارواقع یاکیس رجسٹرڈہواتواس کی ذمہ داری ان پرعائدہوگی

You might also like

Leave A Reply

Your email address will not be published.